ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر ثمر مبارک نے نواز شریف کی سب سے بڑی کرپشن کا انکشاف کر دیا

نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر ثمر مبارک نے نواز شریف کی پانامہ کیس سے بھی بڑی کرپشن کا انکشاف کر دیا۔ انہوں نے بتایا کہ ایک پاور کا منصوبہ تھا جس کے بورڈ آف گورننس کا میں چئیر مین ہوں۔ وہ ایک منصوبہ ہے جو 9 بلین روپے کا ہے۔ اس منصوبے کی دو سال یعنی 2010ء سے لے کر 2012ء تک فنڈنگ ہونا تھی۔یہ پاور منصوبہ 2012ء میں مکمل ہونا تھا، آج 2017ء ہے اور 7 سال میں اس منصوبے کی محض 3 بلین روپے فنڈنگ ہوئی ہے۔ ان پیسوں میں ہم نے 10 میگا واٹ بجلی بنانی شروع کی ہوئی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ بجلی پیدا ہوتے ہی میں نے وزیر اعظم ، وزیر اعلیٰ سندھ اور وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی کو ایک خط کے ذریعے اطلاع دی کہ ہم نے بجلی بنانا شروع کر دی ہے۔ انہوں نے اسی دن اس پراجیکٹ کے لیے ریلیز کی جانے والی رقم روک دی اور کہا کہ آج سے آپ کو پیسے نہیں دئے جائیں گے۔ ڈاکٹر ثمر نےمزید کیا بتایا آپ بھی ملاحظہ کیجئیے:

اپنا تبصرہ بھیجیں