رپورٹ پیش کیے جانے کے چند دن بعد نواز شریف کو نا اہل قرار دیا جائے گا، ڈاکٹر شاہد مسعود

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)ڈاکٹر شاہد مسعود کا کہنا ہے کہ شریف خاندان اس وقت کشمکش کی صورتحال میں دو چار ہے۔ نجی ٹی وی پروگرام میں انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ 10جولائی کو جے آئی ٹی اپنی رپورٹ سپریم کورٹ کے سامنے پیش کردے گی۔ اور 15یا پھر 16جولائی کو وزیر اعظم نواز شریف کو کہہ دیا جائے گا کہ آپ صادق اور امین نہیں رہے ۔اب شریف خاندان اورمسلم لیگ (ن) کے اراکین اسمبلی اس صورتحال میں جس موضوع پر آج کل سب سے زیادہ بات کررہے ہیں وہ ہے وزیر اعظم کی نااہلی کی صورت میں وزارت عظمیٰ اور حکومتی انتظام و انصرام۔ ڈاکٹر شاہد مسعود نے یہ بھی کہا کہ شریف خاندان میں اب ایک ہی شخص بچا ہے اور وہ ہیں ایم این اے حمزہ شہباز جو پانامہ لیکس میں نامزد نہیں ہیں اور جو پیچھے سے خاموشی سے کھڑے سب کچھ دیکھ رہے ہیں۔ ایک طرف شریف خاندان کی جانب سے وزیر اعظم پر دباؤ ہے کہ انھیں آخر کسی نہ کسی پر یقین کرنا پڑے گا جس کے لئے حمزہ شہباز کا نام زیادہ موزوں ہے۔ دوسری جانب مسلم لیگ (ن) کے ارکان اسمبلی ہیں جو یہ کہہ رہے ہیں کہ نواز شریف ،شہباز شریف اور اسحاق ڈار تو نا اہل ہونگے ہی ہونگے ۔ہمارا کیا قصور ہے ؟ ہم پر کیوں کیس دوبارہ کھلوانا چاہتے ہیں۔ وزیر اعظم ہمیں اس قابل تو چھوڑ دیں کہ ہم ان کے لئے احتجاج اور نعرے بازی کر سکیں اور اسمبلی میں ڈیسک بجا سکیں۔لیکن وزیراعظم میاں نواز شریف کو یہ ڈر ہے کہ کہیں ایسا نہ ہو کہ حمزہ شہباز شریف وزارت عظمیٰ ملنے پر اسمبلی ہی تحلیل کر دیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں