نواز شریف کے نا اہل ہو تے ہی سابق آرمی چیف نے پا کستان آنے کا کہہ دیا

دبئی (ویب ڈیسک ) سابق صدر پرویز مشرف نے کہا ہے کہ سپریم کورٹ کا نواز شریف کو ہٹانے کا فیصلہ شاندار اور پاکستانیوں کیلئے خوش آئند ہے ۔ نواز شریف کے جانے سے ان کی ملک واپسی کی راہ ہموار ہو گی ۔ بھارتی اخبار کو انٹرویو کے دوران انہوں نے کہا کہ نواز شریف کو نااہل قرار دینا عدالتی بغاوت نہیں، عدالت نے یہ فیصلہ گہری سوچ بچار کے بعد دیا ، وہ اسی کے حق دار تھے ۔ نواز شریف نے نا صرف غلط بیانی کی بلکہ حقائق بھی توڑ موڑ کر پیش کئے ۔عدالتی فیصلہ پاکستانی عوام کی خواہشات کے عین مطابق ہے ۔ فیصلے کے اثرات کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی نااہلی سے عمران خان اور ان کی پارٹی کو فائدہ پہنچا ہے جبکہ ن لیگ نقصان میں رہی ہے ۔ آئندہ عام انتخابات میں ن لیگ کے خلاف عمران خان کے علاوہ دیگر جماعتوں کیساتھ اتحاد کر سکتے ہیں ، ہمارا مقصد ن لیگ اور پیپلزپارٹی کا راستہ روکنا ہے ، جنہیں عوام تین تین بار آزما چکے ہیں اور انہوں نے عوام کو مایوسی کے علاوہ کچھ نہیں دیا ، صرف لوٹ مار کی ۔حریت رہنماؤں پر پاکستان سے فنڈنگ اور سکولوں کو جلانے کی رپورٹس کو انہوں نے بیہودہ پراپیگنڈا قرار دیتے ہوئے کہا کہ حریت رہنما مجاہدین ہیں جو کشمیریوں کی مدد کرنا چاہتے ہیں، اس کے برعکس بھارتی فوج کشمیر میں نسل کشی کر رہی ہے ۔ امریکہ کی جانب سے 35 کروڑ ڈالر کے فنڈز روکنے پر انہوں نے کہا کہ یہ فنڈز روکنے سے پاکستان مر نہیں جائے گا ۔ انہوں نے چین کو پاکستان کا عظیم دوست قرار دیتے ہوئے ایسی تمام رپورٹس مسترد کر دیں جن میں الزام لگایا گیا ہے کہ بیجنگ پاکستان کو غلام بنانا چاہتا ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں