شرمناک صورتحال، سابق سپیکر قومی اسمبلی فہمیدہ مرزا بھی پکڑی گئیں

اسلام آباد (روزنامہ فرض ) سابق اسپیکر قومی اسمبلی فہمیدہ مرزا کی طرف سے قاعد و ضوابط کی خلاف ورزی کرتے ہوئے پارلیمنٹ میں اپنے سیاسی کارکنوں کو اعلیٰ عہدوں پر تعینات کرنے کا انکشاف ہوا ہے ۔سابق اسپیکر نے پارلیمنٹ کے بنائے ہوئے قوانین کو اپنے ہاتھوں سے دفن کرتے ہوئے سیاسی بنیادوں پر میرٹ کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ان لوگوں کو بھرتی کیا تھا ۔جن کی آگاہی کے باوجودموجودہ اسپیکر قومی اسمبلی اپنی پیش رو کی کارستانیوں پر پردہ ڈالے ہوئے ہیں ۔سیاسی اثر و رسوخ پربغیر ٹیسٹ انٹرویو اہم ذمہ داریاں پانے والوں میں محمد راشد مفضول وفاء،نیازمحمد بشری نازلی اور ظہور احمد شامل ہیں ۔تفصیلات کے مطابق پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف پارلیمنٹری سروسزحکام وسابق سیاسی حکمرانوں کی ایماءپرمسلسل2010ءمیں ختم ہونے والی یوایس ایڈپراجیکٹ کے ملازمین کواہم انتظامی واعلیٰ اختیاراتیپوسٹوں پربغیرٹیسٹ وانٹرویونوازے جانے کے عمل کاانکشاف ہواہے فہمیدہ مرزاکی سفارش پراس وقت کی پیپس انتظامیہ کی طرف سے محمد راشد مفضول وفاءکوگریڈانیس کی پوسٹ پربطورریسرچ ایسوسی ایٹ ،نیازمحمد کوگریڈبارہ کی پوسٹ پربطورایڈمن افسر،بشری نازمی کوگریڈ18کی پوسٹ پربطورمنیجرپی اوسی اورظہوراحمدکوگریڈ17کی پوسٹ پربطور آئی ٹی آفیسرتعینات کیاگیاتھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں